دو ماہ میں 81 ہزار سے زیادہ سعودی برسر روزگار

سعودی سیکریٹری وزارت افراد ی قوت وسماجی بہبود سطام الحربی نے کہا ہےکہ کورونا وبا کے دوران گزشتہ دو ماہ کے دوران 81 ہزار سے زیادہ سعودیوں کو روزگار ملا ہے۔ ان میں خواتین شامل ہیں۔

اخبار 24 کےمطابق ایم بی سی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ گزشتہ پانچ برس کے دوران نجی اداروں میں سعودی ملازمین کا تناسب بڑھ کر 21 فیصد ہو گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ملازم خواتین کا تنا سب 27 فیصد ہوچکا ہے۔ یہ 2020 کے لیے مقرر ہدف سے زیادہ ہے۔ رواں سال 24 فیصد ہدف مقرر تھا۔

انہپوں نے کہا 2030 تک بے روزگاری کی شرح کم ہوکر سات فیصد تک آجائے گی۔

انہوں نے اس اعتماد کااظہار کیا کہ سعودی ملازم اہل ہیں اور وہ بیشتر ذمہ داریاں سنبھال لیں گے۔

About admin

Check Also

اقامے کی مدت باقی ہے، کیا فیس واپس لی جا سکتی ہے؟

سعودی عرب میں وبائی مرض کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے نافذ لاک ڈاؤن کے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *